گول روٹی

گول روٹی میرے لیے ایک نا ئٹ مئیر ہے.آٹا گوندھا تو کبھی غریب کے حال جیسا پتلا کہ جھنڈیاں چپکا لو. یا کبھی ایسا سخت کہ کھانے والا قبض کا مریض ہو جاے. بچے گولیاں بنا کر ماریں تو آنکھ پھوٹ جاے. پیڑا ہی نہیں بنتا. غلطی سے بن جاے تو گھی کے لڈو جیسا. جس رخ سے رکھو اسی طرف بہ جاے.اول تو روٹی گول نہیں. بہت محنت سے گول کرلی تو توے پر ڈالتے ہی یا تو پھٹ گئ یا بیچ سے جل گئ .جب زندگی میں سب سہی چل رہا ہو. لوگوں کے رویے سے لیکر آپ کے ہاتھ کےذایقہ تک. لکھنے کا بھی موڈ ہو. اخبارات میں آرٹیکل بھی دھڑادھڑ چھپ رہے ہوں.دور دراز سے کالز اور تعرہفیں آرہی ہوں. ریسرچ اور تھیسس کا کام بھی اپروو ہونے کی منزل پر ہو اور آپ کے گھر والے(سسرال والے) روٹی کی گولای پر اٹکے ہوں. تو لگتا ہے آپ سے زیادہ ناکارہ کوئ نہیں. زندگی میں آپ نے کچھ کیا ہی نہیں. میں آسکر وننگ اسپیچ لکھ سکتی ہوں. مگر گول روٹی نہیں بنا سکتی. مجھے اعتراف ہے.

Advertisements

2 Replies to “گول روٹی”

  1. Great post. I used to be checking constantly this weblog
    and I’m inspired! Extremely helpful info particularly the final part 🙂 I take care of such information a lot.
    I was seeking this certain information for a very long time.
    Thanks and best of luck.

    Like

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s